امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نے کشمیر میں مظالم پر ایک اور رپورٹ شائع کر دی

امریکی اخبار واشنگٹن پوسٹ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی جانب سے مظالم پر ایک اور رپورٹ شایع کر دی ہے۔

تفصیلات کے مطابق واشنگٹن پوسٹ نے لکھا ہے کہ 5 اگست کے بعد 3 ہزار کے قریب افراد گرفتار کیے جا چکے ہیں، جن میں 13 سال کے بچے بھی شامل ہیں۔

امریکی اخبار نے اپنی رپورٹ میں بچوں کی گرفتاریوں سے متعلق لکھا کہ 13 سال کے فرحان کے 3 دوستوں کو بھی گرفتار کیا گیا۔

رپورٹ میں یہ بھی لکھا گیا ہے کہ کشمیر میں بھارتی فوج نے 5 چھوٹے بچوں کو بھی گرفتار کر رکھا ہے، دوسری طرف کشمیر کی انتظامیہ یہ بتانے کو تیار نہیں کہ کتنے بچوں کو گرفتار کیا گیا ہے۔

اخبار کا کہنا ہے کہ بچوں کی گرفتاری پر سوال پر بھارتی وزارت داخلہ نے کوئی جواب نہیں دیا، جب کہ مودی کے دعوے کے بر عکس مقبوضہ کشمیر ایک ماہ سے مکمل بلیک آؤٹ کا شکار ہے۔

اخبار کے مطابق مقبوضہ کشمیر میں سیاسی قیادت کو گرفتار کر لیا گیا ہے، بھارتی اقدامات سے مقبوضہ وادی میں خوف اور غصے کی فضا ہے، یو این انسانی حقوق کے نمایندوں نے صورت حال کو پریشان کن قرار دیا۔

رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ حراست میں لیے گئے کشمیریوں کو بھارت کی مختلف جیلوں میں قید رکھا گیا ہے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں