ن لیگ کی بیوروکریٹس اور ان کی اولادوں کو دھمکیاں حلال اور ہماری اے سی کی دانستہ کوتاہی کی نشاندہی حرام؟ ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان

گزشتہ روز سے معاون خصوصی برائے اطلاعات پنجاب ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان کی جانب سے اسسٹنٹ کمشنر سیالکوٹ سونیا صدف کو دوران دورہ رمضان بازار ناقص پھلوں پر جھاڑ پلانے کی ویڈیو زیر گردش ہے جس پر ناصرف عام سوشل میڈیا صارفین بلکہ سیاسی جماعتوں کے رہنماؤں کی جانب سے بھی مختلف تبصرے سامنے آرہے ہیں

جس کے بعد بالاآخر معاون خصوصی پنجاب فردوس عاشق اعوان کا اسسٹنٹ کمشنر سیالکوٹ کے معاملے پر مریم نواز کی تنقید پر ردعمل سامنے آگیا ہے

فردوس عاشق اعوان نے ٹوئٹ کرتے ہوئے کہا کہ کرپٹ شاہی خاندان کی جعلی راجکماری کے نزدیک ان کے ابا جی، چچا اور رانا ثنااللہ کی بیوروکریٹس اور انکی اولادوں کو دی گئی دھمکیاں حلال جبکہ اے سی کی دانستہ کوتاہی کی نشاندہی کرنا حرام ہے! عوام جان چکے شاہی خاندان کے کرپٹ لٹیروں کا مقصد کرپشن بچانا جبکہ ہمارا مقصد عوامی مفاد کا تحفظ ہے!

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ تحریک انصاف حکومت مافیا کے خلاف جنگ جاری رکھے ہوئے ہے۔ کھوکھلے دعوؤں سے میڈیا کے سامنے شوبازیوں کے برعکس بزدار حکومت حقیقی عوامی خدمت کا سفر جاری رکھے ہوئے ہے، چھاپہ مار کارروائیوں میں ناجائز منافع خوروں، ذخیرہ اندوزوں کی گرفتاریاں، جرمانے اور مقدمات کا اندراج کیا جارہا ہے۔

واضح رہے کہ مریم نواز نے کہا تھا کہ سول سرونٹس اور بیوروکریٹس پڑھ لکھ کر، محنت کر کے، مقابلے کے امتحان پاس کر کے اس مقام تک پہنچتے ہیں، SELECT ہو کر نہیں آتے۔ وزیر ہونے کا مطلب یہ نہیں ہے کہ آپ کو افسران کی تذلیل کا لائسنس مل گیا ہے۔ یہ رعونت قابل قبول نہیں۔ سونیا صدف سے معافی مانگیے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں