کراچی کنگز کو لاہور قلندرز سے جیت کیلئے 135 رنز کا ہدف

پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) فائیو کے فائنل میں لاہور قلندرز نے کراچی کنگز کو جیت کے لیے 135 رنز کا ہدف دے دیا۔ 

لاہور قلندرز کے کپتان سہیل اختر نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرنے کا فیصلہ کیا جو اس کے لیے درست ثابت نہ ہوسکا۔

قلندرز کے اوپنرز تمیم اقبال اور فخر زمان نے ٹیم کے لیے محتاط آغاز فراہم کیا اور پاور پلے میں نہ صرف محتاط انداز میں کھیلا بلکہ اسپنر افتخار احمد پر چارج کرتے ہوئے بغیر کسی نقصان پر ٹیم کے 50 رنز بھی مکمل کیے۔ 

دوسری جانب کراچی کنگز نے بھی بہترین بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے لاہور قلندرز کو ابتدائی 10 اوورز میں 68 رنز تک محدود رکھا، تاہم کنگز کے بولر حریف ٹیم کی کوئی وکٹ نہ لے سکے۔ 

کراچی کنگز کے کھلاڑیوں کی ہنسی اس وقت لوٹ آئے جب آئرن مین عمید آصف نے 35 رنز بنانے والے تمیم اقبال کو آؤٹ کرکے ہوم ٹیم کو پہلی وکٹ دلوائی۔

اس کے ایک رن بعد ہی عمید آصف کو چھکا لگانے کی کوشش کرتے ہوئے فخر زمان بھی آؤٹ ہوگئے، انھوں نے 27 رنز بنائے تھے۔ 

اگلے ہی اوور میں کنگز کے کپتان عماد وسیم نے پچھلے میچ کے ہیرو محمد حفیظ کو کیچ آؤٹ کروا کر لاہور قلندرز کو کے نقصان میں مزید اضافہ کیا اور یوں قلندرز 70 رنز پر 3 وکٹوں سے محروم ہوگئی۔

سمت پٹیل بھی بجھے بجھے دکھائی دیے اور 81 کے مجموعے پر ارشد اقبال کی گیند پر 5 رنز بنانے کے بعد وقاص مقصود کو کیچ دے بیٹھے۔

کراچی کنگز کی نپی تلی بولنگ کے آگے لاہور قلندرز کے بیٹسمین کی ایک نہ چلی۔

بین ڈنک، ڈیوڈ ویسا، سہیل اختر، سمت پٹیل کوئی خاطر خواہ کارکردی نہ دکھا سکے اور پوری ٹیم مقررہ 20 اوورز میں 134 رنز بناسکی۔ 

اپنا تبصرہ بھیجیں