قائد اعظم کے مزار کو استعمال کرتے ہوئے جھوٹا مقدمہ درج کیا گیا، وزیراعلیٰ سندھ

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے رہنماؤں کے خلاف جھوٹا مقدمہ درج کرنے کے لیے پولیس پر دباؤ ڈالا گیا۔


وزیراعلیٰ نے کہا کہ جلسے کے موقع پر مسلم لیگ (ن) کے رہنما مزار قائد پر حاضری دی اور وہاں نعرے بازی ہوئی جو مناسب نہیں تھی لیکن یہ پہلی مرتبہ نہیں ہوا تھا اس سے قبل پاکستان تحریک انصاف کی جانب سے یہی چیزیں دیکھی گئی تھیں اور انہوں نے مزار کے تقدس کو پامال کیا۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ مزار قائد پر جو کچھ نامناسب ہوا اس پر قانون کے مطابق ایکشن ہونا چاہیے لیکن غیر قانونی طور پر قائداعظم کے مزار کا استعمال کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے رہنماؤں نے 506بی کا مقدمہ درج کروایا۔ جو کہ سراسر غلط ہے ۔ ہم پولئس پر دباؤ نہیں ڈالنے دیں گے۔

اپنا تبصرہ بھیجیں